تارکین کو چھپا کر لانے والی گاڑی کو خوفناک حادثہ پیش آگیا

0

ایتھنز: یورپ داخلے کے خواہشمند غیرقانونی تارکین کو لانے والی گاڑی حادثے کا شکار ہوگئی ، جس میں بڑا جانی نقصان ہوا ہے، یہ حادثہ ترکیہ اور یونان کی سرحد پر پیش آیا ہے، حکام نے زخمیوں اور لاشوں کو اسپتال منتقل کردیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق تارکین کے یورپ داخلے کیلئے پرانے روٹ یعنی ترکیہ اور یونان پر ایک گاڑی کو حادثہ پیش آیا ہے، اس گاڑی میں تارکین وطن موجود تھے، جو ترکیہ سے یونان جانے کی کوشش کررہے تھے، حکام کے مطابق یہ حادثہ ترکیہ اور یونان کی سرحد کے قریب پیش آیا ہے، تارکین وطن کو چھپاکر لے جانے والی گاڑی ایک پولیس چوکی سے بچ کر گزرنے کی کوشش میں حادثے کا شکار ہوئی ، حکام کے مطابق گاڑی کی رفتار بہت تیز تھی، اور ڈرائیور اسے شاہراہ پر الٹی سمت میں چلارہا تھا، تارکین کی گاڑی اس دوران ایک ایس یو وی گاڑی سے ٹکرائی جس سے حادثہ پیش آیا، حادثے میں ایس یو وی گاڑی کے ڈرائیور سمیت 6 افراد ہلاک ہوگئے ہیں، جبکہ کچھ شدید زخمی بتائے جاتے ہیں۔

حکام کے مطابق تارکین کو لانے والی گاڑی کا ڈرائیور زخمی ہے، لیکن وہ زندہ ہے، ہلاک اور زخمی تارکین کو اسپتال منتقل کردیا گیا ہے، جہاں ان کی شناخت کی کوشش کی جارہی ہے، حکام کے مطابق تارکین وطن کو اسمگل کرنے کے لئے جو گاڑیاں استعمال کی جاتی ہیں، ان میں عام طور پر کم عمر اور ناتجربہ کار ڈرائیور استعمال کئے جاتے ہیں، تاکہ پکڑے جانے کی صورت میں انہیں زیادہ سزا نہ ہو، یونانی حکومت ترکیہ سے تارکین کا غیرقانونی داخلہ روکنے کے لئے دریائے ’’ایورس‘‘ کے ساتھ اسٹیل کی دیوار تعمیر کر رہی ہے،جو 5 میٹر بلند ہوگی، اب تک 35 کلومیٹر دیوار تعمیر ہوچکی ہے، تاہم اگلے تین برسوں میں یونان اسے 100 کلومیٹر تک بڑھانا چاہتا ہے۔

Leave A Reply

Your email address will not be published.